گلگت میں جدید نوعیت کی لیبارٹری کا قیام انتہائی اہم منصوبہ ہے، وزیر اعلیٰ گلگت بلتستان حافظ حفیظ الرحمنٰ |PASSUTIMESاُردُو

011گلگت: منگل، 27 اکتوبر، 2015ء – پھسو ٹائمز اُردُو (ایس یو ثاقب) وزیر اعلیٰ گلگت بلتستان حافظ حفیظ الر حمن نے کہا ہے کہ صوبے میں ڈرگ ٹسٹنگ لیبارٹری کے قیا م سے عوام کو معیاری ادویات کی فراہمی اور غیر معیاری ادویات کی فروخت کی روک تھام میں مدد ملے گی۔ صوبائی حکومت نے عوام کو معیاری خوراک اور ادویات کی فراہمی کی اہمیت کو مد نظر رکھتے ہوئے ایک کروڈ سے زیادہ کی مالت سے ٹسٹنگ لیبارٹری کے لیے ضروری مشینری کی خریداری عمل میں لائی ہے ۔ ڈرگ کنٹرول ایڈمنسٹریشن میں سٹاف کی کمی کو دور کیا جائیگا تاکہ ادارے کی کارکردگی کو فعال بنایا جاسکے۔ وزیر اعلیٰ گلگت بلتستان حافظ حفیظ الرحمن نے کہا کہ ڈرک کنٹرول ادارے کو تمام اضلاع میں فعال بنایا جائیگا۔
وزیراعلیٰ نے کہا ہے کہ رجسٹریشن لائسنسنگ بورڈ میں صوبے کی نمائندگی یقینی بنانے کے لیے وفاقی حکومت سے رابطہ کیا جائیگا۔ مسلم لیگ (ن) کی صوبائی حکومت نے صحت کے شعبے کو اولین ترجیحی دی ہے تاکہ عوام کو صحت کے بہتر سہولیات فراہم کیے جاسکیں ۔ حکومت کسی کو قیمتی انسانی زندگیوں سے کھیلنے کی اجازت نہیں دیگی صوبے میں غیر معیاری ادویات کا کاروبار کرنے والوں کے خلاف قانونی کاروائی عمل میں لائی جائیگی۔
وزیر اعلیٰ نے کہا ہے کہ محفوظ انتقال خون کو یقینی بنانے کے لیے گلگت میں جدید نوعیت کی لیبارٹری کا قیام انتہائی اہم منصوبہ ہے ۔ اس لیبارٹر ی کے قیام سے مریضوں کو تصدیق شدہ خون کی فراہمی یقینی بنایا جائیگا۔ وزیر اعلیٰ نے صوبائی سکریٹری صحت کو ہدایت کی ہے کہ محفوظ انتقال خون کو یقینی بنانے کے لیے جلد لیبارٹری کو جلد فعال بنایا جائے حکومت بھرپور وسائل فراہم کریگی۔ ان خیالات کا اظہار وزیراعلیٰ گلگت بلتستان حافظ حفیظ الر حمن نے ڈرگ کنٹرول ایڈمنیسٹریشن اور محفوظ انتقال خون کے حوالے سے قائم کردہ لیبارٹری کے دورے کے موقع پر خطاب کرتے ہوئے کیا ۔ وزیراعلیٰ نے کہا کہ صوبائی حکومت محکمہ صحت میں اصلاحات متعارف کرارہی ہے فیصلوں میں عوام کی شراکت کو یقینی بنایا جائیگا۔ صوبائی حکومت نے عوام کو ریلیف فراہم کرنے کا اعادہ کیا ہے۔ سو دنوں کے ترجیحات میں سے 70% سے زیادہ اہداف حاصل کیے ہیں نومبر میں آئیندہ سو دنوں کے لیے مزید ترجیحات کاتعین کیا جائیگا۔ گلگت بلتستان کی صوبائی حکومت نے اداروں میں اصلاحات متعارف کرنے اور اداروں کی کارکردگی بڑھانے کے لیے پنجاب حکومت سے تعاون لینے کا فیصلہ کیا ہے اس سلسلے میں بہت جلد پنجاب کے سکیریٹریز کا وفد گلگت بلتستان کا دورہ کریں گے۔ وزیر اعلیٰ گلگت بلتستان نے کہا کہ وزیراعلیٰ پنجاب محمد شہباز شریف نے صحت کے شعبے میں مکمل تعاون کی یقین دہانی کرائی ہے۔ پنجاب حکومت گلگت بلتستان کے ہسپتالوں کے لیے سالانہ 7 کروڈ روپوں کے ادویات فراہم کریگی۔ تاکہ مفت ایمرجنسی ادویات کی مریضوں کو فراہمی کی جاسکے۔
وزیر اعلیٰ گلگت بلتستان نے صوبائی سیکرٹری صحت اور ڈرگ کنٹرول ایڈمینسٹریشن کے آفسران کو ہدایت کی ہے مستندڈاکٹرز کے نسخے کے بغیر نشہ اور ادویات کی فروخت پر عائد پابندی پر سختی سے عمل درآمد یقینی بنایا جائے ۔ وزیر اعلیٰ نے صوبائی سیکرٹری صحت کو ہدایت کی ہے کہ وبائی اور موسمی بیماریوں سے بچاؤ اور نشہ آور ادویات کے تقصانات کے حوالے سے عوامی آگاہی مہم کا باقاعدہ آغاز کیا جائے۔
اس سے قبل صوبائی سکیرٹیر ی صحت اور ڈرگ کنٹرول ایڈمینسٹریشن کے آفسران نے ادارے اور محفوظ انتقال خون کے حوالے سے قائم کردہ لیبارٹری کے بارے میں تفصیلی بریفنگ دی ۔ وزیر اعلیٰ گلگت بلتستان نے محفوظ انتقال خون کے حوالے سے قائم لیبارٹری کا دورہ کرتے ہوئے بروقت عمارت کی تعمیر کو یقینی بنانے پر ٹھیکدار اور دیگر عملے کی تعریف کی۔0102

Advertisements

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s