گلگت: ایس ایس آر (سٹیٹ سبجیکٹ رولز ) ہمارا محافظ ہے اس کو ختم یا معطل کرنے میں ہماری بربادی کا آغاز ہوگا، ہدایت اللہ اختر کی تجزیاتی تحریر|PASSUTIMESاُردُو

1380263_1424574177756469_925790672_nگلگت : پیر، 02 نومبر، 2015ء پھسو ٹائمز اُردُو (ہدایت اللہ اختر تجزیاتی تحریر بابت یکم نومبر آزادی گلگت بلتستان) جب بھی یکم نومبر آتا ہے تو کچھ زخم پھر سے ہرے ہوجاتے ہیں ۔۔۔جی بی کے سیاستدان اور دیگر حضرات آج کل اس بات کا رونا روتے ہیں کہ جی بی کی الگ شناخت تھی مٹا دی گئی۔۔ان کی ایک الگ پہچان تھی مسخ کی گئی۔۔ وہ ایک الگ قوم تھے ان سے قومیت چھینی گئی ۔۔۔۔۔ پہلے تو کوئی یہ بھی نہیں سوچتا تھا چلو اچھی بات ہے کچھ سوچ کا عنصر تو آیا۔۔کچھ لوگ تو اسے متنازعہ اور کشمیر مسلے سے ہی انکار تھے اب وہ بھی یہ اقرار کرنے لگے ہین کہ جی بی متنازعہ اور حقوق سے محروم خطہ ہے ۔۔۔۔۔آج پھر یکم نومبر نے دو اشخاص(جناب غلام محمد غون (مرحوم )اور جناب عاقل خان (مرحوم ) سکنان کشروٹ کی یاد دلادی جن کی ایک نہیں سنی گئی ان دو اشخاص نے ستر کی دہائی میں ہر فورم میں گلگتیوں کو سمجھانے کی کوشش کی کہ ایس ایس آر (سٹیٹ سبجیکٹ رولز )ہمارا محافظ ہے اس کو ختم یا معطل کرنے میں ہماری بربادی کا آغاز ہوگا۔۔۔اور ہوا وہی جس کا ڈر تھا ایس ایس آر کو اس وقت کی مذہبی قیادت (دونوں فرقے) کی حمایت کے ساتھ معطل کر دیا گیا تبھی تو کشروٹ کے سیاسی اور معتبر نام غلام محمد غون نے کہا کہ اے گلگتیو میری بات غور سے سنو آپ لوگوں نے خود اپنے پائوں پہ کلہاڑی کا وار کیا ہے اور اب یہ زخم ناسور بن جائیگا۔۔۔۔اور جب یہ باتیں میری ذہن میں آئیں تو اس دانشمند کا چہرہ میرے سامنے آیا۔۔۔۔۔ سلام غلام محمد غون (مرحوم) کاش گلگتی اس وقت تیری بات کو سمجھتے تو آج ان کو یہ دن دیکھنے نہ پڑتے۔

Advertisements

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s