گلگت: سیکریٹری پی اینڈ ڈی محمد حنیف چنہ کی سربراہی میں انٹر سیکٹورل نیوٹریشن حکمت عملی اجلاس ہوا جس میں سیکریٹری صحت ،لوکل گورنمنٹ ،سیکریٹری تعلیم ،سیکریٹری خوراک و زراعت ،اور یونیسیف پاکستان کے سربراہ اور نمائندوں نے شرکت کی|PASSUTIMESاُردُو

0aaa2554-b72a-421d-b2fe-f48bd958285d.jpgگلگت:بدھ، 18 نو  ( ایس یو ثاقب) سیکریٹری پی اینڈ ڈی محمد حنیف چنہ کی سربراہی میں انٹر سیکٹورل نیوٹریشن حکمت عملی اجلاس ہوا جس میں سیکریٹری صحت ،لوکل گورنمنٹ ،سیکریٹری تعلیم ،سیکریٹری خوراک و زراعت ،اور یونیسیف پاکستان کے سربراہ اور نمائندوں نے شرکت کی جس میں نیوٹریشن حکمت عملی کی منظوری دیدی گئی اس حکمت عملی میں مختلف اداروں کی کارکردگی کو بڑھانے کیلئے قت کو تعین کردیا ہے کہ وقت کے مطابق لوگوں کو سہولیات ان کے گھر کے دہلیز تک پہنچائے جائیں اجلاس میں تمام اداروں کے اہداف تعین کئے گئے تاکہ لوگوں کو ان کے ضرورت کے مطابق غذر مل جائے اور غذائی کمی سے ہونے والی بیماریوں کا علاقہ سے تدراک ہوجائے مذکورہ حکمت عملی کے منظوری کے بعد مختلف شعبہ جات اور معاون ادارے پابندہوجاتے ہیں کہ تعین کردہ کام مقررہ وقت میں پورا کریں تاکہ بہتر غذا مل سکے اس عمل میں UNICEFپاکستان اور مالیاتی اداروں کی مدد سے جاتی ہے اس حکمت عملی کے تحت گلگت بلتستان میں خواتین اور بچوں کی نیوٹریشن کی صلاحیتوں کو بہتر بناناہے اور بچوں اور ماؤں کے شرح اموا ت کو کنٹرول کرنے کیلئے حکمت عملی اور منصوبہ بندی شامل ہے اس حکمت عملی کو پایہ تکمیل تک پہنچانے کیلئے گلگت بلتستان کے تمام مذکورہ بالا محکمے اپنے شعبوں کے ذریعے تعاون کریں گے اس حوالے سے تمام محکموں کو کوٹے کے تحت کام دیدیا جائیگا جو بروقت کرنے کے تمام ادارے پابند ہونگے تاکہ لوگوں کی نشونما کی صلاحیتوں کو بڑھاکر شرح اموات میں کنٹرول پایا جاسکے اور مکتلف امراض میں کنٹرول اور ان کے تدراک کرنے کی جدوجہد میں مددگار ہونگے ۔

Advertisements

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s