گلگت: پہاڑوں کا تحفظ حقیقت میں قدرتی وسائل کا تحفظ ہے اور قدرتی وسائل کا تحفظ انسانوں کی تعمیر و ترقی کا ضامن ہے، شاعر عبدالحفیظ شاکر|PASSUTIMESاُردُو

01.JPGگلگت: جمعہ، 11 دسمبر، 2015ء پھسو ٹائمز اُردُو (پ ر) پہاڑوں کا تحفظ حقیقت میں قدرتی وسائل کا تحفظ ہے اور قدرتی وسائل کا تحفظ انسانوں کی تعمیر و ترقی کا ضامن ہے اس لئے پہاڑوں اور پہاڑوں کے دامن میں موجود قدرتی وسائل کا تحفظ نسل انسانی کی بقاء کیلئے ناگزیر ہے ان خیالات کااظہار معروف شاعر عبدالحفیظ شاکر نے پی ای این اور اے کے آر ایس پی اور حلقہ ارباب زوق کے زیر اہتمام پہاڑوں کے عالمی دن کے مناسبت سے منعقدہ محفل مشاعرہ میں بحیثیت مہمان خصوصی کیا اس موقع پر گلگت بلتستان کے معروف شاعر جمشید خان دکھی نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پہاڑ جہاں اللہ تعالیٰ کی قدرت کی نشانیاں ہیں وہیں زمین پر حیاتیاتی ارتقاء کا بہت بڑا زریعہ بی ہیں لہٰذا ان کا تحفظ نہ صرف ہم سب کی زمہ داری ہے بلکہ فرض بھی ہے اس خصوصی محفل مشاعرہ میں جن شعراء کرام نے اپناکلام پیش کیا ان میں جمشید خان دکھی ،عبدالحفیظ شاکر ،غلام عباس نسیم ،اشتیاق احمد یاد ،فاروق قیصر ،رضا عباس تابش ،جعفر حسین عاجز ،آصف علی آصف اور تہذیب حسین برچہ شامل تھے اس موقع پر PENکے ڈائریکٹر اعجاز احمد خان نے پہاڑوں کے عالمی دن کے اغراض و مقاصد اور اہمیت پر روشنی ڈالی ۔

Advertisements

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s