ہنزہ:حسین آباد پل کو مرحوم استاد افسرکے نام سے منسوب نہ کرنا اس کی قربانیوں کی توہین ہے ،شہید مرحوم استاد نے ایک بچہ کی جان بچاتے ہوئے اپنے جان قربان کی تھی|PASSUTIMESاُردُو

hussain abad bridge.jpg

اعظم برچہ فائل فوٹو حیسن آباد ہنزہ بریج

ہنزہ: ہفتہ، 19 دسمبر، 2015ء – پھسو ٹائمز اُردُو (نمائندہ خصوصی)  حسین آباد پل کو مرحوم استاد افسرکے نام سے منسوب نہ کرنا اس کی قربانیوں کی توہین ہے ،شہید مرحوم استاد نے ایک بچہ کی جان بچاتے ہوئے اپنے جان قربان کی تھی ۔شہیداستاد افسر ایک مخلص ،دیانت داراور بچوں سے شفقت کرنے والے انسان تھے اس کی بڑی مثال انہوں نے جب ایک چھوٹا بچہ جو حسین آباد سے گلگت آنے والی مسافر ویگن کا کنڈیکٹر تھا اور حسین آباد معلق پل سے سائڈوں کے گارڈ نہ ہونے کی وجہ سے دریائے ہنزہ میں گرا تھا اور اس کو دریاء سے نکالنے کی کوشش کرتے ہوئے اپنی جان بھی دے دی تھی اورجس پر اس وقت کے حکومت نے بھی کہا تھا کہ نئی بنے والی آرسی سی پل شہید استاد افسر کے نام سے منسوب کیا جائے گا جبکہ پل کا کام مکمل ہوچکاہے لیکن حکومت کی جانب سے اس حوالے سے کوئی رد عمل نظر نہیں آرہاہے جس پر حسین آباد ،مایون اور خانہ آباد کے عوام شدید تشویش کا اظہار کیا ہے ۔یاد رہے مرحوم استاد افسر نے 16جنوری 2006ء میں مسافر گاڑی کے’’ کنڈکٹر ‘‘بچے کی جان بچاتے ہوئے اپنی جان قربان کی تھی ۔استاد افسر نے اپنی پوری زندگی بچوں کو پڑھاتے ہوئے گزاری تھی اور بچے استاد مرحوم کو بہت پسند کرتے تھے اور اس کی ناگہانی موت پر پورا علاقہ کہیں دنوں تک سوگوار ہوگیا تھا ۔استاد افسرعوامی مسائل میں پیش پیش ہوتے تھے اور علاقے کے لڑائی جگڑے ہو ں یا کوئی اور آپس کے اختلافات تو جرگہ بناکر ان کو حل کرتے تھے جس کی وجہ سے بالخصوص حسین آباد اور ہنزہ شناکی کے عوام میں بالعموم مشہور تھے ۔اس حوالے سے حسین آباد ،مایون اور خانہ آباد کے عمائیدین کریم خان ،اسلم خان ،محبوب عالم ،ارمان علی ،صلاالدین ،صاحب خان ، علی خان ،غلام عباس ، علی مدد ،علی احمد ،احمد خان، مایون گاؤں سے کے سید عالم ،گوہر حیات ،علی مراد ،بابرخان اور خانہ آباد شناکی سے شیر باز ،عباس خان ،شکورللہ بیگ ،مردان اور دیگر نے مطالبہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ مرحوم استاد افسر نے ایک معصوم بچے کی جان بچاتے ہوئے اپنی جان قربان کی ہے جس پر حسین آباد پل ان کے نام سے منسوب کیا جائے ۔

Advertisements

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s