غذر: یاسین سے تعلق رکھنے والی مسماۃ(ج) نے جان بچانے کیلئے ویمن پولیس اسٹیشن پہنچ گئی|PASSUTIMESاُردُو

yourstory_supreme_court_women_safetyغذر: منگل، 05 جنوری، 2015ء پھسو ٹائمز اُردُو (نمائندہ خصوصی) یاسین سے تعلق رکھنے والی مسماۃ(ج) نے جان بچانے کیلئے ویمن پولیس اسٹیشن پہنچ گئی۔ باخبر ذرائع کے مطابق مسماۃ(ج) متاثرہ خاتون کا کہنا ہے کہ ان کی طلاق ہو چکی ہے جبکہ اس کی جان کو انکے خاندان کی طرف سے خطرہ ہے۔ لہٰذا تحفظ فراہم کیا جائے۔ اس حوالے سے ویمن پولیس اسٹیشن کی ایس پی طاہرہ یعصوب سے رابطہ کیا تو انہوں نے کہا کہ خاتون ویمن پولیس اسٹیشن میں موجود ہے اور اس کو عدالت میں پیش کرینگے۔ عدالت جو فیصلہ کریگی خاتون کو اسی فیصلے کے مطابق عمل کیا جائے گا جبکہ انسانی حقوق کی تنظیموں اور سول سوسائٹی کے افراد کا کہنا ہے کہ متعلقہ کاتون کو ان کے گھر والے عزت کے نام پر قتل کرنا چاہتے ہیں لہٰذا صوبائی حکومت اور ہوم سیکرٹری اس خاتون کی جان کی حفاظت کو یقینی بنائے۔ ان کا کہنا ہے کہ خاتون پر کوئی ایف آئی آر نہیں ہوئی ہے جبکہ ویمن پولیس اسٹیشن کی ایس ایچ او گلاب پری اور کانسٹیبل زیتون و ثمینہ متعلقہ خاتون پر تشدد کر رہے ہیں اور دباؤ ڈال رہے کہ وہ اپنے گھر والوں کے ساتھ جائے۔ لہٰذا صوبائی حکومت فوری طور پر شلٹر ہاؤس بنائے اور خاتون کی جان کا تحفظ یقینی بنایا جائے۔

Advertisements

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s