گلگت: ضلعی انتظامیہ سکوار میں خون خرابہ کرانا چاہتی ہے جسکی ہم کسی صورت اجازت نہیں دینگے،عمائدین سکوار|PASSUTIMESاُردُو

1ba1e809-e454-416a-bdfa-923c21746e84گلگت: ہفتہ، 26 مارچ، 2016ء – پھسو ٹائمز اُردُو (نمائندہ خصوصی) ضلعی انتظامیہ سکوار میں خون خرابہ کرانا چاہتی ہے جسکی ہم کسی صورت اجازت نہیں دینگے۔ ایماندار عملے کو تبادلہ کرکے ضلعی انتظامیہ مسائل پیدا کررہی ہے۔ موضع سکوار میں فیروز خان جیسے ایماندار اور فرض شناص پٹواری کو تعینات کیا جائے۔ ان خیالات کا اظہار عمائدین سکار جابر حسین بوگر نے اپنے ایک بیان میں کیا۔ انہوں نے کہا کہ ضلعی انتظامیہ فوری طور پر فیروز خان جیسے ایماندارو پٹواری کو دوباری تعینات کرے کیونکہ سکوار انتہائی حساس علاقہ ہے۔ یہاں زمینی تنازعات پر پہلے بھی تقل و غارت گری ہوئی ہے جسکی وجہ سے امن وامان کے مسائل پیدا ہورہے ہیں۔ ہم چیف سیکریٹری ، ڈپٹی کمشنر اور اسسٹنٹ کمشنر سے پرزور مطالبہ کرتے ہیں کہ فیروز خان جیسے ایماندارو اور فرض شناص پٹواری کو موضع سکوار میں دوبارہ تعینات کرکے علاقے میں امن وامان برقرار رکھے۔ اچھے اور ایماندار عملہ تعینات نہ ہونے کی وجہ سے پہلے بھی سکوار میں کئی تنازعات چل رہے ہیں جس کی وجہ سے نااہل عملہ اور ان کی کارکردگی رہی ہے۔ اگر عمائدین سکوار کے جائز مطالبات نہیں مانے گئے تو شاہرارہ قراقرم بلاک کرکے شدید احتجاج کرنے پر مجبور ہونگے۔ عمائدین سکوار کا کہنا ہے کہ تحصیل میں ایک سازش کے تحت ایماندار عملے کو دیوار سے لگایا جارہا ہے جس کی ہم بھرپور مزمت کرتے ہیں اگر سکوار میں کوئی تنازعہ پیدا ہوا تو اس کی ذمہ داری ضلعی انتظامیہ پرعائد ہوگی۔

Advertisements

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s