گوجال: رابطہ سڑک فوری طور پر بحال کیا جائے، وادی چپورسن میں غذائی بحران پیدا ہونے کا شدید خدشہ |PassuTimesاُردُو

12670625_1014166811953341_4417983665457765066_nتازہ ترین: پیر، 04 اپریل، 2016ء – پھسو ٹائمز اُردُو (محمد ایوب شاہ) ضلع ہنزہ کی دور افتادہ گاؤں وادی چُپورسن میں گزشتہ تین دن سے جاری برفباری آج بند ہونے کے بعد جگہ جگہ لینڈسلائیڈنگ، برفانی اور مٹی کے تودے گرنے کا عمل شروع ہو گیا ہے جس کی وجہ سے وادی چپورسن کو سوست سے ملانے والی واحد رابطہ سٹرک کئی مقامات پر  برفباری، لینڈسلائڈنگ، برفانی تودے اور مٹی کے تودے کی زد میں آنے سے شدید متاثر ہوئی ہیں، جس کی وجہ سے وادی چپورسن میں 4 ہزار کی آبادی بلکہ محصور ہو کر رہ گئیں ہیں، زمینی رابط منقطع  ہونے کے بعد وادی میں غزائی اجناس کی قلت پیداء ہونے کا خطرہ لاحق ہو گیا ہے، بجلی اور مواصلاتی بلکل درہم برہم ہے، جبکہ کلاس 9 اور 10 کے بچے امتحانی مراکز میں پہنچنا مشکل ہو چکاہے علاقے کی مکینوں نے وزیر اعلیٰ  گلگت بلتستان سے چپورسن روڈ کی فوری بحالی کے لئےعملی طور پر اقدامات اٹھانے کی اپیل کی ہے تاکہ علاقہ مزید بحران سے  محفوظ رہ سکے۔

Advertisements

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s