چلاس: حالیہ بارشوں کے باعث شاہراہ قراقرم بلاک ہونے سے دیامر میں غذائی قلت کا خدشہ ، چلاس گندم ڈپو میں13سو بوریاں گندم کا سٹاک رہ گیا

12924334_1687801448137660_14082306074950930_nچلاس: جمعہ، 08 اپریل، 2016ء -پھسو ٹائمز اُردُو (عمر فاروق فاروقی) حالیہ بارشوں کے باعث شاہراہ قراقرم بلاک ہونے سے دیامر میں غذائی قلت کا خدشہ ، چلاس گندم ڈپو میں13سو بوریاں گندم کا سٹاک رہ گیا۔ داریل تانگیر اور تھک نیاٹ کے گندم ڈپوز گندم سے خالی ہیں اور علا قے میں قحط کی سی صورت حال پیدا ہوگئی ہے ۔ دیامر کے نالہ جات کو جانے والی رابطہ سڑکیں بند ہونے کی وجہ سے بالائی علاقوں میں نظام زندگی مکمل طور پر مفلوج ہوکر رہ گیا ہے ۔ چلاس میں پٹرول ختم ہونے سے ٹرانسپورٹرز اور مسافر راستوں میں پھنسے ہوئے ہیں ۔ ۔حالیہ بارشوں سے متاثرہ عوام اب بھی کھلے آسمان تلے زندگی گزارنے پر مجبورہیں ،صوبائی حکومت کی طرف سے تاحال متاثرین کی بحالی کیلئے بروقت اقدامات نہیں اُٹھائے جانے کے باعث متاثرین سراپا احتجاج ہیں ،متاثرین اور دیگر لوگوں کے گھروں میں فاقوں کی نوبت ہے،متاثرین چاول اوربسکٹ کھانے پر مجبور ہوچکے ہیں ۔متاثرین کا کہنہ ہے کروڑوں روپے مالیت کی اراضی بارشوں کی نظر ہوچکی ہے ،سر سے سایہ چھین گیا ہے ،مکانات منہدم ہونے سے بے گھر ہوکر رشتہ داروں کے گھروں میں سر چھپائے بیٹھے ہوئے ہیں ،لیکن صوبائی حکومت خاموش تماشائی بنی بیٹھی ہے ،کوئی پوچھنے والا نہیں ،ہم کسمپرسی کی زندگی گزاررہے ہیں ۔متاثرین اور دیامر کے عوام نے وزیر اعظم پاکستان اوروزیر اعلی گلگت بلتستان سے پرزور مطالبہ کیا ہے کہ وہ نوٹس لیکرمتاثرین کی بحالی کیلئے ٹھوس اور ہنگامی بنیادوں پر اقدامات اُٹھا کر متاثرین کی دل جوئی کریں ۔

Advertisements

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s